اسرائیل کے وزیراعظم یائر لاپد اور ترک صدر طیب اردوان نے اعلان کیا ہے کہ اسرائیل اور ترکیہ کے مابین تعلقات مکمل طور پر معمول پر آچکے ہیں۔

دونوں ممالک نے اپنے سفیروں اور قونصل جنرلز کو دوبارہ تعینات کرنے کا عزم ظاہر کیا ہے۔

اسرائیلی وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ترکیہ کے ساتھ تعلقات کو ازسرِ نو بحال کرنا علاقائی استحکام سمیت دو طرفہ معاشی، تجارتی اور سیاحتی شعبوں کے لیے بہت اہم ہے۔

ترک صدر اردوان نے انقرہ میں سفیروں کی ایک تقریب میں کہا کہ تعلقات بحال ہونے سے ہم اپنے فلسطینی بھائیوں کی مدد کرسکیں گے۔

اسرائیل کی وزارت خارجہ کے ڈائریکٹر جنرل ایلون اُشپز اور ترک ڈپٹی وزیر خارجہ سدات اونال نے گزشتہ روز ٹیلیفون پر بات کرتے ہوئے سفارتی تعلقات مکمل طور پر بحال کرنے پر رضامندی ظاہر کی۔

اسرائیل کے صدر آئیزیک ہرزوگ نے کہا کہ پڑوسیوں کے ساتھ اچھے تعلقات ہم سب کے لیے اہم ہیں، تمام مذاہب کے پیروکار، مسلم، یہودی اور عیسائی ایک ساتھ امن کے ساتھ رہ سکتے ہیں۔




Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Previous post کوریائی ستارے گونگ ہیو جن اور کیون اوہ اکتوبر میں شادی کے بندھن میں بندھ جائیں گے، جوڑے نے شادی کی تفصیلات شیئر کیں
Next post فارن فنڈنگ کیس کی تحقیقات: عمران خان کا جواب دینے سے انکار – ایکسپریس اردو